Daily Din News
لاپتاافراد کی بازیابی سےمتعلق سندھ ہائیکورٹ کے ریمارکس

لاپتاافراد کی بازیابی سےمتعلق سندھ ہائیکورٹ کے ریمارکس

 سندھ ہائی کورٹ میں لاپتا افراد کی بازیابی کے متعلق درخوات کی سماعت میں عدالت نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ پولیس کی نااہلی کی وجہ سےلاپتا افرادکےاہلخانہ عدالتوں میں ہنگامہ کرتےہیں،پیش رفت رپورٹس پیش نہ کرنےپرایڈیشنل سیکریٹری داخلہ کی سرزنش، یہ نہیں ہوسکتا ایڈیشنل سیکریٹری داخلہ آئیں اورتاریخ لے کر چلے جائیں،کیا محکمہ داخلہ سندھ کو بھی عدالتیں خود چلائیں،اعلیٰ پولیس افسران کو پتا کچھ بھی نہیں ہوتا،جو بھی کرنا ہے کریں،لاپتا افراد کو بازیاب کرائیں،عدالتی احکامات پرعمل نہ ہواتوچیف سیکریٹری،سیکریٹری داخلہ کوبلائیں گے،پولیس والے جعلی مقابلوں میں ملوث ہیں،سب انسپکٹرشعیب پرپولیس مقابلےکےالزامات ہیں، ان کےخلاف کیوں کارروائی نہیں ہوئی،جس پر ڈی ایس پی ملیر نے کہا کہ سب انسپکٹرشعیب کو ملازمت سے فارغ کردیاگیا ہےاوران کی گرفتاری کیلیے چھاپے مارے لیکن سب انسپکٹر شعیب روپوش ہے،عدالت نےاحکامات پرعملدرآمدنہ کرنےپرڈی آئی جی ایسٹ22 دسمبرکو طلب کر لیا ۔

متعلقہ خبریں